وفاقی دارالحکومت میں 50 فُٹ سے بلند تمام عمارات کا فائر آڈٹ ہو گا: سی ڈی اے

وفاقی ترقیاتی ادارے کیپیٹل ڈویلپمنٹ اتھارٹی (سی ڈٰی اے) کا کہنا ہے کہ وفاقی دارالحکومت میں 50 فُٹ سے بلند عمارات کا فائر آڈٹ کرنے کا فیصلہ کیا گیا ہے۔

سی ڈی اے حکام کے مطابق گذشتہ دنوں وفاقی دارالحکومت کے نجی مال میں آگ لگنے کے واقعے کے بعد یہ فیصلہ کیا گیا۔ اجلاس میں فیصلہ کیا گیا کہ 50 فٹ سے بلند تمام عمارات کا فائر آڈٹ کیا جائے گا۔ یہ بھی فیصلہ کیا گیا کہ اونچی عمارات میں آگ لگنے کی ہنگامی صورتحال سے نمٹنے کے لیے ایمرجنسی رسپانس ٹیمیں مشق بھی سرانجام دیں گی۔ اجلاس میں اس بات پر بھی غور کیا گیا کہ ہنگامی حالات میں ایمرنسی ڈیزاسٹر سیل کے رسپانس کو بہتر بنانے اور اسے جدید آلات سے لیس کرنے کی بھی ضرورت ہے۔

حکام کے مطابق سی ڈی اے چیئرمین اور چیف کمشنر اسلام آباد کیپٹن (ر) محمد عثمان یونس نے بروز اتوار نجی مال میں لگنے والی آگ کو بجھانے کے ریسکیو آپریشن میں حصہ لینے والے عملے کو سرٹیفکیٹ دینے کا بھی اعلان کیا۔

کیپٹن (ر) محمد عثمان یونس کا کہنا تھا کہ ریسکیو آپریشن میں فائر بریگیڈ، پاکستان نیوی، پاکستان ایئر فورس اور ریسکیو 1122 کے اہل کاروں نے حصہ لیا۔

سی ڈی اے حکام کے مطابق نجی مال میں آگ لگنے کے واقعے کے بعد تکنیکی ٹیم کی رپورٹ آنے تک مال اور اس سے ملحقہ رہائشی ٹاورز کو احتیاطاً سیل کر دیا گیا۔

مزید خبروں اور اپڈیٹس کیلئے وزٹ کیجئے گرانہ بلاگ۔

About Rizwan Ali Shah

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے