حکومت نے ہزارہ موٹروے کو مانسہرہ مظفرآباد موٹروے سے ملانے کے لیے 2 ارب روپے کی منظوری دے دی

21 NI

اسلام آباد: مانسہرہ مظفر آباد موٹروے کو ہزارہ موٹر وے سے ملانے والے پوٹھہ انٹرچینج کو وفاقی حکومت کی جانب سے 2 ارب روپے کی منظوری دے دی گئی ہے۔

 

تفصیلات کے مطابق وزیراعظم نے 20 کروڑ روپے خرچ کرنے کی منظوری دی تھی۔ مانسہرہ مظفر آباد موٹر وے پراجیکٹ پر پوٹھہ انٹر چینج کی تعمیر کے لیے 2 ارب روپے کی منظوری دے دی ہے۔ جس کی پہلے ہی خیبر پختونخوا کو آزاد جموں و کشمیر سے ملانے کی منظوری دی گئی تھی۔

 

مانسہرہ مظفر آباد موٹروے سے دور ہونے کے باوجود بدرہ انٹرچینج ہزارہ موٹروے کو شاہراہ قراقرم اور مانسہرہ شہر سے جوڑتا ہے۔

 

پوٹھہ انٹر چینج کی ترقی سے مانسہرہ شہر اور اس کے مضافات کے مکینوں کو قلندر آباد انٹر چینج سے ہزارہ موٹر وے تک رسائی کے لیے اب کم فاصلہ طے کرنا پڑے گا۔ اور ہزارہ موٹر وے براری کے راستے مانسہرہ مظفر آباد موٹروے سے منسلک ہونے سے پہلے بکریال کے علاقے سے گزرے گی۔

مزید یہ کہ وزیراعظم کے اگلے دورے کے دوران ایشیاء کے سب سے بڑے گرڈ سٹیشن کا افتتاح بھی کیا جائے گا۔

مزید خبروں اور اپڈیٹس کیلئے وزٹ کیجئے گرانہ بلاگ۔