عالمی برادری کا سیلاب متاثرین کے لئے 50 کروڑ ڈالر فوری امداد کا اعلان

50 Croe NI

اسلام آباد: وزیراعظم شہباز شریف نے سیلاب زدگان کی مدد کے لئے انٹرنیشنل پارٹنرز کے ساتھ اقتصادی امور ڈویژن میں اہم اجلاس کیا۔ اجلاس میں ورلڈ بینک، ایشائی ترقیاتی بینک، عالمی مالیاتی اداروں سمیت چین، امریکہ اور یورپی ممالک کے نمائندوں نے شرکت کی۔

اقوام متحدہ کے  مختلف ذیلی اداروں، عالمی ادارہ صحت کے نمائندے بھی اجلاس میں شریک ہوئے۔

وزیراعظم شہباز شریف نے انٹرنیشنل پارٹنرز کو ملک بھر میں خاص طور پر سندھ اور بلوچستان میں سیلاب کی تباہی کاریوں کے بارے میں آگاہ کیا۔

وزیرِ اعظم کی اپیل پر سیلاب متاثرین کیلئے بین الاقوامی تنظیموں اور مالی اداروں  نے  50 کروڑ ڈالر سے زائد کی فوری امداد کا اعلان کیا۔

ورلڈ بنک کے کنٹری ڈائریکٹر ناجے بنحسین نے وزیرِ اعظم کو ورلڈ بنک کی طرف سے 35 کروڑ ڈالر کی فوری امداد کے بارے میں آگاہ کیا۔ ورلڈ بنک یہ امداد رواں ہفتے کے آخر تک مکمل طور پر فراہم کر دے گا۔ انہوں نے خصوصی طور پر وزیرِ اعظم کے فلڈ ریلف کیش پروگرام کی تعریف کی۔  اور انفراسٹرکچر کی بحالی کیلئے بھی نقصانات کے تخمینے کے بعد جامع منصوبہ بندی سے پاکستان کے ساتھ تعاون کا یقین دلایا۔

 

عالمی برادری کا سیلاب متاثرین کے لئے 50 کروڑ ڈالر فوری امداد کا اعلان

 

وزیر اعظم نے کہا کہ حکومت نے مشکل معاشی صورتحال میں ہونے کے باوجود فلڈ ریلیف کیش پروگرام شروع کیا۔ حکومت ترجیحی بنیادوں پر سیلاب متاثرین کے ریسکیو اور ریلیف کیلئے آپریشن کر رہی ہے۔ ریسکیو آپریشنز کے بعد حکومت سیلاب متاثرین کی بحالی اور تباہ شدہ انفراسٹرکچر کی تعمیر پر کام شروع کرے گی۔

اقوامِ متحدہ کے ذیلی ادارے ورلڈ فوڈ پروگرام نے سیلاب متاثرین کیلئے 110 ملین ڈالر کی امداد کا اعلان کیا۔ جبکہ ایشیئن ڈویلپمنٹ بنک نے 20 ملین ڈالر اور یوکے ایڈ نے 1.5 ملین پاونڈ کی فوری امداد کا اعلان کیا۔ علاوہ ازیں،  یوکے ایڈ کی طرف سے سیلاب متاثرین کی بحالی کیلئے وسط اور طویل مدتی منصوبوں کیلئے 38 ملین پاؤنڈ کا بھی اعلان کیا۔

 

مزید خبروں اور اپڈیٹس کیلئے وزٹ کیجئے گرانہ بلاگ۔