مالی سال 2022 میں ترسیلاتِ زر کے حجم میں ماہانہ بنیادوں پر 18.4 فیصد تک کا ریکارڈ اضافہ: اسٹیٹ بینک

اسلام آباد: اسٹیٹ بینک آف پاکستان کا کہنا ہے کہ مالی سال 2022 میں ترسیلاتِ زر کے حجم میں ماہانہ بنیادوں پر 18.4 فیصد تک کا ریکارڈ اضافہ کیا گیا جبکہ بیرون ملک پاکستانیوں نے اس عرصے کے دوران مجموعی طور پر 31 ارب ڈالر کی ترسیلات پاکستان بھیجیں ہیں۔

پاکستان کے مرکزی بینک کی جانب سے جاری اعداد و شمار کے مطابق جون 2022 میں بیرون ممالک سے 2.76 ارب ڈالر کی ترسیلات بھیجی گئیں، دو ارب ماہانہ ترسیلات کی لہر کا یہ 25 واں مہینہ ہے۔

اعلامیے کے مطابق سعودی عرب میں مقیم پاکستانیوں نے صرف جون 2022 کے مہینے میں 66 کروڑ 64 لاکھ ڈالر بھیجے، متحدہ عرب امارات سے 49 کروڑ ڈالر، برطانیہ سے 45 کروڑ اور امریکا سے 28 کروڑ ڈالر بھیجے گئے۔

اسٹیٹ بینک کا کہنا ہے کہ بیرونِ ملک مقیم پاکستانیوں نے مالی سال 2022 کے دوران 31 ارب 23 کروڑ ڈالر کی ترسیلات پاکستان بھیجیں۔

مرکزی بینک کی جانب سے جاری اعداد و شمار میں بتایا گیا ہے کہ جولائی 21 سے جون 22 تک سعودی عرب سے پاکستانیوں نے 7.74 ارب ڈالر بھیجے، عرب امارات سے پاکستانیوں کی ترسیلاتِ زر 5.84 ارب ڈالر رہیں جبکہ برطانیہ میں مقیم پاکستانیوں نے گزرے مالی سال 4.48 ارب ڈالر کی ترسیلات بھیجیں۔

اسٹیٹ بینک کے مطابق مشرقِ وسطیٰ کے دیگر ممالک سے مجموعی طور پر 3.62 ارب کی ترسیلاتِ زر پاکستان بھیجی گئیں، یورپ سے 3.36 ارب اور امریکا سے 3.08 ارب ڈالر کی ترسیلات پاکستان کو موصول ہوئیں۔

اعلامیے میں بتایا گیا ہے کہ مالی سال 2022 کی اوسط ماہانہ ترسیلات 2.60 کروڑ ڈالر رہیں جبکہ مالی سال 2021 کے مقابلے میں موجودہ ترسیلات 6 فیصد سے زائد رہیں۔

مزید خبروں اور اپڈیٹس کیلئے وزٹ کیجئے گرانہ بلاگ۔

About Zeeshan Javaid

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔