کے پی میں ضم علاقوں میں چار میگا پراجیکٹس پر کام شروع

KP initiates four mega projects in merged tribal areas

پشاور:    کے پی حکومت نے سابقہ فاٹا کے علاقوں میں چار بڑے پراجیکٹس پر کام شروع کر دیا ہے جس سے قبائلی عوام کو سستی بجلی  ملے گی۔

صوبائی وزیر برائے توانائی اور قوت نے میڈیا کو بتایا کہ کے پی حکومت نے ضلع کرم میں چپاری درخیل ڈیم پر کام شروع کر دیا ہے جس سے 10.5میگا واٹ بجلی پیدا ہوگی۔ یہ پراجیکٹ تین سالوں میں مکمل ہوگا اور اس پر 4.4 ارب روپوں کی لاگت آئے گی۔

اس کے ساتھ ساتھ صنعتی ترقی اور ذراعت کے فروغ کیلئے مختلف پراجیکٹس پر کام شروع ہے جس سے کارخانوں کو سستی بجلی فراہم ہوگی۔ مساجد میں جدید ٹیکنالوجی کی حامل شمسی توانائی کا انتظام کر دیا گیا ہے۔ علاوہ ازیں شمسی توانائی  سے بھر پور فائدہ اٹھانے کیلئے 13شمسی گرڈز بنائے جائنگے تاکہ بجلی کی وافر مقدار  فراہم کرنے میں آسانی ہو۔ یہاں سے حاصل شدہ توانائی سے کمرشل  علاقوں، مارکیٹ، انڈسٹری اور دیگر کاروبار کی جگہوں کو بھی بجلی مہیا کی جائیگی۔ اس پراجیکٹ کو پی ڈی ڈبلیو پی نے منظور کیا تھا جس کو 729ملین روپے کی لاگت سے مکمل کیا جایئگا۔

About Maham Tahir

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔