ریکوڈک منصوبے میں مقامی سرمایہ کاروں کو سرمایہ کاری کی پیشکش

Govt. to convince local investors to invest in Riko Diq

کو ئٹہ:    بلوچستان حکومت ریکو ڈک منصوبے میں مقامی سرمایہ کاروں کو مائل کرنے میں سرگرم ہے۔ وزیر اعلی  جام کمال کے مطابق صوبائی حکومت کی  خواہش ہے کہ مقامی کمپنیز ریکوڈک منصوبے میں  سرمایہ کاری کریں  کیونکہ صوبائی اور وفاقی حکومتوں کے پاس مناسب ذرائع نہیں ہیں۔ اگر اس پراجیکٹ پر صحیح معنوں  میں کام کیا جائے تو یہ صوبے اور ملک کی تقدیر بدل سکتا ہے۔

اس منصوبے سے کمرشل پیداوار حاصل کر نے کیلئے 3-4ارب ڈالر کی سرمایہ کاری چاہیئے جو اس 6 ارب ڈالر کے علاوہ  ہےجوپاکستان کی حکومت نے بطور جرمانہ ٹیتھیان کاپر کمپنی کو دینا ہے۔  وزیر اعلی  نے مزید بتایا کہ اس صورت حال میں کسی بیرونی سرمایہ کاری کی توقع رکھنا  فائدہ مند نہیں باالخصوص جب اس پراجیکٹ کے تحت اتنا بڑا  سرمایہ واجب لاادا  ہو۔

یہ جرمانہ انٹر نیشنل سنٹر فار سیٹلمنٹ آف انوسٹمنٹ ڈسپیوٹس نے 13جولائی کو لگایا تھا۔ کل جرمانہ 4.08ارب ڈالر جبکہ 1.87ارب ڈالر سود کی شکل میں ادا کرنا ہے۔  سرمایہ کار کمپنی کے مطابق انہوں نے  220ملین ڈالر  کی سرمایہ کاری پہلے ہی کر دی تھی جب صوبائی حکومت نے معاہدہ ختم کردیا۔ مذکورہ کمپنی نے 11.43ارب ڈالر کا دعوی کر رکھا تھا جس میں 6ارب ڈالر تسلیم کیا گیا۔

About Maham Tahir

Comments

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔