وزیراعظم کی ملک بھر میں جمعہ تک مواصلاتی نظام بحال کرنے کی ہدایات

Showbaz NI

اسلام آباد: وزیراعظم شہباز شریف نے خیبر پختونخوا کے سیلاب زدہ علاقوں کے دورے سے واپسی پر ایف ڈبلیو او سمیت دیگر اداروں کے نقصانات اور انفراسٹرکچر کی بحالی پر جاری کام کی پیش رفت کا جائزہ لینے کیلئےفوری اجلاس طلب کیا۔ جس میں ملک بھر میں بجلی، سڑکوں اور مواصلاتی نظام کی بحالی پر غور کیا گیا ۔

اس موقع پر وزیر اعظم نے ہدایت دیتے ہوئے کہا کہ کالام سوات رابطہ سڑکیں آئندہ ہفتے تک بحال کی جائیں۔ پاور ڈویژن اب تک بجلی کے نظام کی بحالی کیلئے اپنے کام کی تفصیلی رپورٹ پیش کرے۔

وزیر اعظم نے ہداہات دیں کہ رپورٹ میں پیش رفت کے ساتھ تعطل کا شکار کام پر بھی تفصیلات سے آگاہ کیا جائے۔ دو روز میں بلوچستان کی تمام تر بجلی بحال کرنے اور ٹرانسمیشن لائن کی مرمت یقینی بنائی جائے۔

 

ان کا کہنا تھا کہ اس سلسلے میں پاور ڈویژن اپنے اعلی ترین افسروں کو فیلڈ میں ڈیوٹی پر تعینات کرے۔ پاور ڈویژن کا کوئی بھی افسر بجلی کی بحالی اور مرمت تک دفتر میں نہ بیٹھے۔

 

وزیراعظم کی ملک بھر میں جمعہ تک مواصلاتی نظام بحال کرنے کی ہدایات

 

وزیر اعظم نے ٹرانسمیشن لائن کیلئے درکار تعمیراتی سامان مقامی سطح پر تیار کیے جانے کی ہدایات دیں۔ ڈسکوز کے چیف ایگزیکٹو اپنے شہروں میں موجود رہیں۔ اور ان کے ناموں اور نمبر کے ساتھ عوام کی سہولت اور شکایت کے لئے آگاہی مہم چلائی جائے۔

انہوں نے وفاقی وزیر بجلی، انجینئر خرم دستگیر خان کو سیلاب سے متاثرہ ٹرانسمیشن نیٹ ورک کی بحالی کے کام کی نگرانی کرنے کیلئے فوری طور پر خیبر پختونخوا پہنچنے اورتمام تر مسائل کو دور کرکے رپورٹ پیش کرنے کی ہدایت دی۔

اجلاس میں وفاقی وزراء احسن اقبال، مریم اورنگزیب، خرم دستگیر خان، ڈی جی ایف ڈبلیو او، چیئرمین این ایچ اے اور متعلقہ وزارتوں کے حکام نے شرکت کی۔

اجلاس کو بلوچستان، سندھ، خیبر پختونخوا اور جنوبی پنجاب میں سڑکوں کے نقصانات اور جاری بحالی کے کام سے تفصیلی طور پر آگاہ کیا گیا۔

بجلی کی ٹرانسمیشن لائنز کی بحالی کے کام پر بھی اجلاس میں تفصیلی بریفنگ دی گئی۔ وزیراعظم نے سیلاب سے تباہ شدہ انفراسٹرکچر اور بجلی کے نظام کی بحالی کے کام کو تیز کرنے اور جلد از جلد مکمل کرنے کی ہدایات دیں۔

 

مزید خبروں اور اپڈیٹس کیلئے وزٹ کیجئے گرانہ بلاگ۔