اسٹیٹ بینک کا نیا پاکستان سرٹیفیکیٹ کی شرح منافع بڑھانے کا اعلان

اسلام آباد: اسٹیٹ بنک آف پاکستان نے نیا پاکستان سرٹیفیکیٹ کی شرح منافع بڑھانے کا اعلان کیا ہے جبکہ بیرونِ ملک مقیم پاکستانیوں نے حکومتی اقدام روشن اپنا گھر کو ایک اچھی اسکیم قرار دیا ہے۔

اسٹیٹ بنک آف پاکستان کی طرف سے روشن ڈیجیٹل اکاؤنٹ کے تحت نیا پاکستان سرٹیفیکیٹ میں سرمایہ کاری کرنے والے بیرونِ ملک مقیم پاکستانیوں کے لئے اچھی آ گئی ہے۔

مرکزی بینک کی پوڈ کاسٹ میں تبادلہ خیال کرتے ہوئے اسٹیٹ بینک کے سنئیر جوائنٹ ڈائریکٹر ڈیجیٹل انوویشن اینڈ سیٹلمینٹ سید علی رضا نے کہا کہ مرکزی بینک کی طرف سے بنیادی شرح سود میں اضافے کے بعد بیرونِ ملک مقیم پاکستانیوں کی طرف سے شرح منافع بڑھانے کا مطالبہ زور پکڑ رہا تھا۔

بیرونِ ملک مقیم پاکستانیوں کے اس مطالبے پر اسٹیٹ بینک کام کر رہا ہے اور شرح منافع کو مارکیٹ کے مطابق کرنے کا عمل آخری مرحلے میں داخل ہو چکا ہے۔

اس موقع پر ان کا کہنا تھا کہ مرکزی بینک نے حال ہی میں روشن ڈیجیٹل اکاؤنٹ کے حوالے سے ایک جامع سروے کیا ہے جس میں 160 ممالک سے 10,000 پاکستانیوں نے حصہ لیا۔

اس سروے میں روشن اپنا گھر اسکیم کو سب سے بہتر قرار دیا گیا جبکہ روشن اپنی کار اسکیم کو بھی سراہا گیا۔

سروے کے مطابق 70 فیصد پاکستانی مجموعی طور پر روشن ڈیجیٹل اکاؤنٹ سے مطمئن نظر آئے۔

نئی پراڈکٹس کے حوالے سے بات کرتے ہوئے سید علی رضا کا کہنا تھا کہ بیرونِ ملک مقیم پاکستانیوں کے لئے انشورنس اور پینشن اسکیم جلد متعارف کرانے جا رہے ہیں اور اس حوالے سے مختلف بینکوں سے بات چیت کا سلسلہ جاری ہے۔

سید علی رضا نے مزید کہا کہ اس وقت تک 30,000 کے قریب بیرونِ ملک مقیم پاکستانیوں نے شکایات درج کرائیں جن میں سے 99.6 فیصد شکایات کا ازالہ کیا جا چکا ہے۔

اس ضمن میں مرکزی بینک اووسیز پاکستانیوں کی شکایات کے ازالے کے لئے سنوائی کے نام سے شکایات سیل قائم کر رہی ہے جس سے شکایات کے حل کو بروقت اور نظام کو مزید بہتر بنانے میں مدد ملے گی۔

مرکزی بینک اوورسیز پاکستانیوں کے لئے روشن ڈیجیٹل اکاؤنٹ کے تحت نیا پاکستان سرٹیفیکیٹ، روشن اپنا گھر، روشن اپنی کار، روشن سماجی بہبود اور اسٹاک مارکیٹ میں سرمایہ کاری کے مواقع فراہم کر رہا ہے۔

مزید خبروں اور اپڈیٹس کیلئے وزٹ کیجئے گرانہ بلاگ۔

About Zeeshan Javaid

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔